Manzil Dua – منزل دعا

Reading Time: 10 minutes

Dua e Manzil / Al Ruqyah Al Shariah (Ruqyah Shariah)

Manzil Dua consists of 33 Ayats of Quran that are to be recited as a means of antidote.
Ruqya from Black Magic, protection from Jinn, Witchcraft, Sehr, Sorcery, Evil Eye & protection from other harmful things.

Dua e Manzil is a present for everyone who wants to read Manzil as they do on a regular paper version of the Holy Quran. It is more convenient on the eyes and is with Urdu translation and the YouTube video.
(Link is below)
According to Islamic knowledge and culture, Manzil provides you safety and protection from Kaala Jaadu, Jinns, Churails, Demons, Black Magic, Genies, Evil Eye, Nazar, Witchcraft, Sehar, and any other evil forces. It is the best antidote for magic.
It is usually read once in the morning and once in the evening by any member of the Muslim family.

Also Read; Surah Fatiha

Also Watch; Shaikh Sudais reciting Surah Fatiha


Manzil Dua (Video) in Urdu Translation to Cure & Protection from Black Magic, Jinn

For Urdu Translation, Click CC (Captions)

URDU and English Translation of Manzil Dua in the Voice of Abdul Sudais (Cure & Protection from Black Magic, Jinn)

The Manzil Dua comprises of the following verses from the Quran which is in the Urdu Translation of the verses: below along with the Quran Chapter references:

Al-Fatihah (chapter 1): verses 1 to 7

اللہ کے نام سے جو رحمان و رحیم ہے
 تعریف اللہ ہی کے لیے ہے جو تمام کائنات کا رب ہے
  رحمان اور رحیم ہے
روز جزا کا مالک ہے
ہم تیری ہی عبادت کرتے ہیں اور تجھی سے مدد مانگتے ہیں
ہم کو سیدھا راستہ چلا،
 راستہ ان کا جن پر تو نے احسان کیا، نہ ان کا جن پر غضب ہوا اور نہ بہکے ہوؤں کا

Read More ...

In the name of God, the Compassionate, the Merciful.
Praise be to God, Lord of the Worlds.
The Compassionate, the Merciful.
Master of the Day of Judgment.
You alone we worship; and upon You, we call for help.
Guide us along the straight path.
The path of those You have blessed, not of those with anger on them, nor of the misguided.

Al-Bakarah (chapter 2) : verses 1 to 5, 163, 255 to 257 & 284 to 286

 الف لام میم
 یہ اللہ کی کتاب ہے، اس میں کوئی شک نہیں ہدایت ہے اُن پرہیز گار لوگوں کے لیے
جو غیب پر ایمان لاتے ہیں، نماز قائم کرتے ہیں، جو رزق ہم نے اُن کو دیا ہے، اُس میں سے خرچ کرتے ہیں
 جو کتاب تم پر نازل کی گئی ہے (یعنی قرآن) اور جو کتابیں تم سے پہلے نازل کی گئی تھیں ان سب پر ایمان لاتے ہیں اور آخرت پر یقین رکھتے ہیں
 ایسے لوگ اپنے رب کی طرف سے راہ راست پر ہیں اور وہی فلاح پانے والے ہیں
 تمہارا خدا ایک ہی خدا ہے، اُس رحمان اور رحیم کے سوا کوئی اور خدا نہیں ہے
 اللہ، وہ زندہ جاوید ہستی، جو تمام کائنات کو سنبھالے ہوئے ہے، اُس کے سوا کوئی خدا نہیں ہے وہ نہ سوتا ہے اور نہ اُسے اونگھ لگتی ہے زمین اور آسمانوں میں جو کچھ ہے، اُسی کا ہے کون ہے جو اُس کی جناب میں اُس کی اجازت کے بغیر سفارش کر سکے؟ جو کچھ بندوں کے سامنے ہے اسے بھی وہ جانتا ہے اور جو کچھ اُن سے اوجھل ہے، اس سے بھی وہ واقف ہے اور اُس کی معلومات میں سے کوئی چیز اُن کی گرفت ادراک میں نہیں آسکتی الّا یہ کہ کسی چیز کا علم وہ خود ہی اُن کو دینا چاہے اُس کی حکومت آسمانوں اور زمین پر چھائی ہوئی ہے اور اُن کی نگہبانی اس کے لیے کوئی تھکا دینے والا کام نہیں ہے بس وہی ایک بزرگ و برتر ذات ہے
دین کے معاملے میں کوئی زور زبردستی نہیں ہے صحیح بات غلط خیالات سے ا لگ چھانٹ کر رکھ دی گئی ہے اب جو کوئی طاغوت کا انکار کر کے اللہ پر ایمان لے آیا، اُس نے ایک ایسا مضبوط سہارا تھام لیا، جو کبھی ٹوٹنے والا نہیں، اور اللہ (جس کا سہارا اس نے لیا ہے) سب کچھ سننے اور جاننے والا ہے
 جو لوگ ایمان لاتے ہیں، اُن کا حامی و مددگار اللہ ہے اور وہ ان کو تاریکیوں سے روشنی میں نکال لاتا ہے اور جو لوگ کفر کی راہ اختیار کرتے ہیں، اُن کے حامی و مدد گار طاغوت ہیں اور وہ انہیں روشنی سے تاریکیوں کی طرف کھینچ لے جاتے ہیں یہ آگ میں جانے والے لوگ ہیں، جہاں یہ ہمیشہ رہیں گے
 آسمانوں اور زمین میں جو کچھ ہے، سب اللہ کا ہے تم اپنے دل کی باتیں خواہ ظاہر کرو یا چھپاؤ اللہ بہرحال ان کا حساب تم سے لے لے گا پھر اسے اختیار ہے، جسے چاہے، معاف کر دے اور جسے چاہے، سزا دے وہ ہر چیز پر قدرت رکھتا ہے
رسول اُس ہدایت پر ایمان لایا ہے جو اس کے رب کی طرف سے اس پر نازل ہوئی ہے اور جو لوگ اِس رسول کے ماننے والے ہیں، انہوں نے بھی اس ہدایت کو دل سے تسلیم کر لیا ہے یہ سب اللہ اور اس کے فرشتوں اوراس کی کتابوں اور اس کے رسولوں کو مانتے ہیں اور ان کا قول یہ ہے کہ: “ہم اللہ کے رسولوں کو ایک دوسرے سے الگ نہیں کرتے، ہم نے حکم سنا اور اطاعت قبول کی مالک! ہم تجھ سے خطا بخشی کے طالب ہیں اور ہمیں تیری ہی طرف پلٹنا ہے
 اللہ کسی متنفس پر اُس کی مقدرت سے بڑھ کر ذمہ داری کا بوجھ نہیں ڈالتا ہر شخص نے جو نیکی کمائی ہے، اس کا پھل اسی کے لیے ہے اور جو بدی سمیٹی ہے، اس کا وبال اسی پر ہے (ایمان لانے والو! تم یوں دعا کیا کرو) اے ہمارے رب! ہم سے بھول چوک میں جو قصور ہو جائیں، ان پر گرفت نہ کر مالک! ہم پر وہ بوجھ نہ ڈال، جو تو نے ہم سے پہلے لوگوں پر ڈالے تھے پروردگار! جس بار کو اٹھانے کی طاقت ہم میں نہیں ہے، وہ ہم پر نہ رکھ، ہمارے ساتھ نرمی کر، ہم سے در گزر فرما، ہم پر رحم کر، تو ہمارا مولیٰ ہے، کافروں کے مقابلے میں ہماری مدد کر

Watch Surah Baqarah #Sudais Voice …

Alif. Lam. Meem.
This is the Book in which there is no doubt, guidance for the righteous.
Those who believe in the Unseen, and perform the prayers, and donate from what We have provided for them.
And those who believe in what was revealed to you, and in what was revealed before you, and are certain of the Hereafter.
These are upon guidance from their Lord. These are the successful.
Your God is one God. There is no god but He, the Compassionate, the Merciful.
God, there is no god except He, the Living, the Everlasting. Neither slumber overtakes Him, nor sleep. To Him belongs whatsoever is in the heavens and whatsoever is on earth. Who is there who can intercede with Him without His permission? He knows what is ahead of them, and what is behind them; and they cannot grasp any of His Knowledge, except as He wills. His Throne extends over the heavens and the earth, and their preservation does not burden Him. He is the Most-High, the Tremendous.
God is the Guardian of those who believe; He brings them out of darknesses into the light. As for those who disbelieve, their guardians are the transgressors; they bring them out of the light into darknesses—these are the inhabitants of the Fire, remaining in it forever.
To God belongs whatsoever is in the heavens and whatsoever is on earth. Whether you disclose what is in yourselves, or conceal it, God will call you to account for it. He forgives whom He wills, and He punishes whom He wills, and God is capable of all things.
The Messenger has believed in what was revealed to him from his Lord, as did the believers. They all have believed in God, His angels, His scriptures, and His messengers: “We do not differentiate between any of His messengers.” And they say, “We hear and we obey. Your forgiveness, our Lord. To you is destiny.”
God burdens no soul beyond its capacity. To its credit is what it earns, and against it is what it commits. “Our Lord, do not condemn us if we forget or make a mistake. Our Lord, do not burden us as You have burdened those before us. Our Lord, do not impose on us more than we have the strength to bear; and pardon us, and forgive us, and have mercy on us. You are our Master, so help us against the disbelieving people.”

Al-Imran (chapter 3) : verses 18, 26 & 27

 اللہ نے خود شہادت دی ہے کہ اس کے سوا کوئی خدا نہیں ہے، او ر (یہی شہادت) فرشتوں اور سب اہل علم نے بھی دی ہے وہ انصاف پر قائم ہے اُس زبردست حکیم کے سوا فی الواقع کوئی خدا نہیں ہے

 کہو! خدایا! مُلک کے مالک! تو جسے چاہے، حکومت دے اور جسے چاہے، چھین لے جسے چاہے، عزت بخشے اور جس کو چاہے، ذلیل کر دے بھلائی تیرے اختیار میں ہے بیشک تو ہر چیز پر قادر ہے

 رات کو دن میں پروتا ہوا لے آتا ہے اور دن کو رات میں جاندار میں سے بے جان کو نکالتا ہے اور بے جان میں سے جاندار کو اور جسے چاہتا ہے، بے حساب رزق دیتا ہے

Watch Surah Al e Imran #Sudais Voice…

Al-A’araf (chapter 7) : verses 54 to 56

در حقیقت تمہارا رب اللہ ہی ہے جس نے آسمانوں اور زمین کو چھ دنوں میں پیدا کیا، پھر اپنے تخت سلطنت پر جلوہ فرما ہوا جو رات کو دن پر ڈھانک دیتا ہے اور پھر دن رات کے پیچھے دوڑا چلا آتا ہے جس نے سورج اور چاند اور تارے پیدا کیے سب اس کے فرمان کے تابع ہیں خبردار رہو! اُسی کی خلق ہے اور اسی کا امر ہے بڑا با برکت ہے اللہ، سارے جہانوں کا مالک و پروردگار

 ا پنے رب کو پکارو گڑگڑاتے ہوئے اور چپکے چپکے، یقیناً و ہ حد سے گزرنے والوں کو پسند نہیں کرتا

 زمین میں فساد برپا نہ کرو جبکہ اس کی اصلاح ہو چکی ہے اور خدا ہی کو پکارو خوف کے ساتھ اور طمع کے ساتھ، یقیناً اللہ کی رحمت نیک کردار لوگوں سے قریب ہے

Al-Israa (chapter 17) : verses 110 & 111

  اے نبیؐ، اِن سے کہو، اللہ کہہ کر پکارو یا رحمان کہہ کر، جس نام سے بھی پکارو اُس کے لیے سب اچھے ہی نام ہیں اور اپنی نماز نہ بہت زیادہ بلند آواز سے پڑھو اور نہ بہت پست آواز سے، ان دونوں کے درمیان اوسط درجے کا لہجہ اختیار کرو

 اور کہو “تعریف ہے اس خدا کے لیے جس نے نہ کسی کو بیٹا بنایا، نہ کوئی بادشاہی میں اس کا شریک ہے، اور نہ وہ عاجز ہے کہ کوئی اس کا پشتیبان ہو” اور اس کی بڑائی بیان کرو، کمال درجے کی بڑائی

Al-Muminoon (chapter 23) : verses 115 to 118

کیا تم نے یہ سمجھ رکھا تھا کہ ہم نے تمہیں فضول ہی پیدا کیا ہے اور تمہیں ہماری طرف کبھی پلٹنا ہی نہیں ہے؟

  پس بالا و برتر ہے اللہ، پادشاہ حقیقی، کوئی خدا اُس کے سوا نہیں، مالک ہے عرش بزرگ کا

اور جو کوئی اللہ کے ساتھ کسی اور معبود کو پکارے، جس کے لیے اس کے پاس کوئی دلیل نہیں، تو اس کا حساب اس کے رب کے پاس ہے ایسے کافر کبھی فلاح نہیں پا سکتے

 اے محمدؐ، کہو، “میرے رب درگزر فرما، اور رحم کر، اور تو سب رحیموں سے اچھا رحیم ہے”

Al-Saaffaat (chapter 37) : verses 1 to 11

 قطار در قطار صف باندھنے والوں کی قسم

 پھر اُن کی قسم جو ڈانٹنے پھٹکارنے والے ہیں

 پھر اُن کی قسم جو کلام نصیحت سنانے والے ہیں

 تمہارا معبود حقیقی بس ایک ہی ہے

 وہ جو زمین اور آسمانوں کا اور تمام اُن چیزوں کا مالک ہے جو زمین و آسمان میں ہیں، اور سارے مشرقوں کا مالک

 ہم نے آسمان دنیا کو تاروں کی زینت سے آراستہ کیا ہے

 اور ہر شیطان سرکش سے اس کو محفوظ کر دیا ہے

  یہ شیاطین ملاء اعلیٰ کی باتیں نہیں سن سکتے، ہر طرف سے مارے اور ہانکے جاتے ہیں

  اور ان کے لیے پیہم عذاب ہے

 تاہم اگر کوئی ان میں سے کچھ لے اڑے تو ایک تیز شعلہ اس کا پیچھا کرتا ہے

 اب اِن سے پوچھو، اِن کی پیدائش زیادہ مشکل ہے یا اُن چیزوں کی جو ہم نے پیدا کر رکھی ہیں؟ اِن کو تو ہم نے لیس دار گارے سے پیدا کیا ہے

Al-Rehman (chapter 55) : verses 33 to 40

  اے گروہ جن و انس، گر تم زمین اور آسمانوں کی سرحدوں سے نکل کر بھاگ سکتے ہو تو بھاگ دیکھو نہیں بھاگ سکتے اِس کے لیے بڑا زور چاہیے

اپنے رب کی کن کن قدرتوں کو تم جھٹلاؤ گے؟

(بھاگنے کی کوشش کرو گے تو) تم پر آگ کا شعلہ اور دھواں چھوڑ دیا جائے گا جس کا تم مقابلہ نہ کر سکو گے

  اے جن و انس، تم اپنے رب کی کن کن قدرتوں کا انکار کرو گے؟

  پھر (کیا بنے گی اُس وقت) جب آسمان پھٹے گا اور لال چمڑے کی طرح سرخ ہو جائے گا؟

  اے جن و انس (اُس وقت) تم اپنے رب کی کن کن قدرتوں کو جھٹلاؤ گے؟

 اُس روز کسی انسان اور کسی جن سے اُس کا گناہ پوچھنے کی ضرورت نہ ہوگی

 پھر (دیکھ لیا جائے گا کہ) تم دونوں گروہ اپنے رب کے کن کن احسانات کا انکار کرتے ہو

Watch Surah Rahman #Sudais Voice …

Al-Hashr (chapter 59) : verses 21 to 24

  اگر ہم نے یہ قرآن کسی پہاڑ پر بھی اتار دیا ہوتا تو تم دیکھتے کہ وہ اللہ کے خوف سے دبا جا رہا ہے اور پھٹا پڑتا ہے یہ مثالیں ہم لوگوں کے سامنے اس لیے بیان کرتے ہیں کہ وہ (اپنی حالت پر) غور کریں

  وہ اللہ ہی ہے جس کے سوا کوئی معبود نہیں، غائب اور ظاہر ہر چیز کا جاننے والا، وہی رحمٰن اور رحیم ہے

  وہ اللہ ہی ہے جس کے سوا کوئی معبود نہیں وہ بادشاہ ہے نہایت مقدس، سراسر سلامتی، امن دینے والا، نگہبان، سب پر غالب، اپنا حکم بزور نافذ کرنے والا، اور بڑا ہی ہو کر رہنے والا پاک ہے اللہ اُس شرک سے جو لوگ کر رہے ہیں

  وہ اللہ ہی ہے جو تخلیق کا منصوبہ بنانے والا اور اس کو نافذ کرنے والا اور اس کے مطابق صورت گری کرنے والا ہے اس کے لیے بہترین نام ہیں ہر چیز جو آسمانوں اور زمین میں ہے اُس کی تسبیح کر رہی ہے، اور وہ زبردست اور حکیم ہے

Al-Jinn (chapter 72) : verses 1 to 4

 اے نبیؐ، کہو، میری طرف وحی بھیجی گئی ہے کہ جنوں کے ایک گروہ نے غور سے سنا پھر (جا کر اپنی قوم کے لوگوں سے) کہا: “ہم نے ایک بڑا ہی عجیب قرآن سنا ہے

 جو راہ راست کی طرف رہنمائی کرتا ہے اِس لیے ہم اُس پر ایمان لے آئے ہیں اور اب ہم ہرگز اپنے رب کے ساتھ کسی کو شریک نہیں کریں گے

اور یہ کہ ہمارے رب کی شان بہت اعلیٰ و ارفع ہے، اُس نے کسی کو بیوی یا بیٹا نہیں بنایا ہے

اور یہ کہ ہمارے نادان لوگ اللہ کے بارے میں بہت خلاف حق باتیں کہتے رہے ہیں

Al-Kaafiroon (chapter 109) : verses 1 to 6

 کہہ دو کہ اے کافرو
 میں اُن کی عبادت نہیں کرتا جن کی عبادت تم کرتے ہو
 اور نہ تم اُس کی عبادت کرنے والے ہو جس کی عبادت میں کرتا ہوں
 اور نہ میں اُن کی عبادت کرنے والا ہوں جن کی عبادت تم نے کی ہے
 اور نہ تم اُس کی عبادت کرنے والے ہو جس کی عبادت میں کرتا ہوں
 تمہارے لیے تمہارا دین ہے اور میرے لیے میرا دین

Al-Ikhlas (chapter 112) : verses 1 to 4

 کہو، وہ اللہ ہے، یکتا
  اللہ سب سے بے نیاز ہے اور سب اس کے محتاج ہیں
  نہ اس کی کوئی اولاد ہے اور نہ وہ کسی کی اولاد
 اور کوئی اس کا ہمسر نہیں ہے

Watch Surah Ikhlas #Sudais Voice …

Al-Falaq (chapter 113) : verses 1 to 5

 کہو، میں پناہ مانگتا ہوں صبح کے رب کی
 ہر اُس چیز کے شر سے جو اُس نے پیدا کی ہے
 اور رات کی تاریکی کے شر سے جب کہ وہ چھا جائے
 اور گرہوں میں پھونکنے والوں (یا والیوں) کے شر سے
 اور حاسد کے شر سے جب کہ وہ حسد کرے

Watch Surah Al Falaq #Sudais Vocie …

Al-Naas (chapter 114) : verses 1 to 6

  کہو، میں پناہ مانگتا ہوں انسانوں کے رب
 انسانوں کے بادشاہ
 انسانوں کے حقیقی معبود کی
 اُس وسوسہ ڈالنے والے کے شر سے جو بار بار پلٹ کر آتا ہے
 جو لوگوں کے دلوں میں وسوسے ڈالتا ہے
 خواہ وہ جنوں میں سے ہو یا انسانوں میں سے

Manzil Dua PDF
Download


Check out our : Strawberry Mousse Recipe

Also Read: Top 5 Best Dog Collars

Also Read: Top 5 Best Cat Backpacks

Also Read: Top 5 Best Feather Toys for Cats

Also Read: Top 5 Best Airline Approved Pet Carrier

Listen to Surah Rahman Recitation: Surah Ar Rahman الرحمان – Al Quran 55 | Abdul Rahman Al Sudais | عبد الرحمن السدیس

Follow on Instagram: instagram.com/iqrabycanvasexp


DISCLAIMER:
All content, products, images, logos, designs, videos, newsletters, catalogs available on this site are owned by CanvasExpose.com for use on this site platform only.

Any unauthorized use or copy of the same is strictly prohibited.


Read More:

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *